70

اپوزیشن کی کرپشن بے نقاب کریں‘وزیر اعظم کی ارکان کو ہدایت

وزیراعظم عمران خان نے لیگی رہنما سردار ایاز صادق کے قومی سلامتی کے منافی بیان کو عوامی سطح پر بھرپور طریقے سے اٹھانے کی ہدایت کر دی ہے ۔ وزیراعظم کی زیر صدارت ترجمانوں کا اجلاس ہوا جس میں ملکی سیاسی، معاشی صورتحال اور اپوزیشن کے جلسوں کے مدنظر آئندہ کی حکمت عملی پر غور کیا گیا۔ذرائع کے مطابق وزیراعظم نے ایاز صادق کے منفی بیان کو عوامی سطح پر اٹھانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے عوام فوج سے پیار کرتے ہیں ،فوج مخالف بیانیہ پر (ن) لیگ میں تقسیم ہے ۔ حکومتی بیانیہ اور اقدامات کو موثر طورپر اجاگر کیا جائے ۔ انہوں نے اس موقع پر عوامی فلاح کے منصوبوں کو بھی تیز کرنے کی ہدایت کی۔وزیراعظم نے اجلاس میں موجود ارکان اسمبلی کو بھی متحرک کرنے کی ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن کا مقصد صرف این آر او حاصل کرنا ہے ۔ اپوزیشن اور پاکستان کے مفادات الگ الگ ہیں۔ اپوزیشن کی کرپشن کو عوام میں زیادہ سے زیادہ بے نقاب کیا جائے ۔ علاوہ ازیں وزیراعظم کی زیرصدارت ایک اور اہم اجلاس ہوا جس میں قومی یکساں نصاب تعلیم سے متعلق امور کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس کو وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے بریفنگ دی۔ ان کا کہنا تھا کہ اس کا اطلاق ملک کے تمام نجی، سرکاری سکولوں اور دینی مدارس پر بھی ہوگا۔ اسلامیات پہلی سے بارہویں جماعت تک علیحدہ مضمون ہوگا ، اقلیتی طلبہ کے لیے مذہبی تعلیمات کے نام سے ایک الگ مضمون متعارف کرایا گیا ہے ۔ تعلیم کے شعبے میں طبقاتی تقسیم ختم کرنا حکومت کی اولین ترجیح ہے ۔اس موقع پر اپنے خطاب میں وزیراعظم کا کہنا تھا کہ یکساں نظام تعلیم ناصرف دور جدید کا تقاضا ہے بلکہ ہر بچے کا بنیادی حق ہے ۔ نئی نسل کوخاتم النبیّین ﷺ کی حیات مبارکہ اور سنت کے متعلق مکمل آگاہی ہونی چاہیے ۔دوسری جانب وزیراعظم نے پانچ نومبر کو حکومتی اتحادی جماعتوں کے رہنماؤں کو عشائیہ دینے کا فیصلہ کیا۔ایم کیو ایم،مسلم لیگ(ق)،جی ڈی اے ،بی اے پی سمیت دیگر اتحادیوں کو وزیراعظم ہاؤس میں عشائیے میں شرکت کے دعوت نامے بھیج دئیے گئے ۔وزیر اعظم اتحادیوں سے سیاسی امور پر مشاورت کریں گے ۔باوثوق ذرائع کے مطابق وزیر اعظم کو اتحادیوں سے ملاقات کا مشورہ شیخ رشید ودیگر سیاسی قائدین نے دیا ۔اس کے علاوہ عمران خان جلد بلوچستان کا بھی دورہ کریں گے ۔ وزیر برائے دفاعی پیداوار زبیدہ جلال اور ڈپٹی سپیکر قاسم خان سوری کے درمیان اس دورے سے متعلق اہم امور پر بات چیت ہوئی ہے ۔ پارلیمنٹ ہاؤس میں گزشتہ روز دونوں رہنماؤں میں ملاقات ہوئی ۔ بلوچستان میں جاری ترقیاتی منصوبوں ، صوبے کے عوام کو درپیش مسائل اور ملک کی مجموعی سیاسی و معاشی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔علاوہ ازیں وزیراعظم عمران خان جمعہ کو سوات کا دورہ کریں گے اورشہریوں میں انصاف صحت کارڈتقسیم کریں گے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں