311

ضمنی الیکشن: این اے 131 سے 35 امیدوار میدا ن میں

لاہور کی قومی اسمبلی این اے 131 سے خواجہ سعد رفیق‘ ان کی اہلیہ غزالہ سعد‘ ولید اقبال‘ ہمایوں اختر اور ابرارالحق سمیت 35 امیدواروں کے کاغذات نامزدگی منظور کرلئے گئے۔ سکروٹنی کا عمل شروع ‘ دوسری جانب پی پی 164 سے 32امیدوار قسمت آزمائیں گے جبکہ پی پی 165سے 35امیدوار آمنے سامنے ہو سکتے ہیں۔ این اے 131 سے خواجہ سعد رفیق ان کی اہلیہ غزالہ سعد رفیق‘ ایم پی اے میاں مرغوب احمد‘ عظمیٰ بخاری‘ رابعہ فاروقی‘ باقر حسین‘ سید مرتضیٰ رانا عمر شاہد‘ سید انور‘ ظفر علوی‘ حاجی جاوید‘ اسجد علی‘ کلیم اللہ‘ رانا احسان‘ شعیب چیمہ‘ حافظ فرحت ‘ رانا خالد‘ عنبر شہزادہ‘ خواجہ عبدالستار‘ سید تجمل شاہ‘ شیخ وسیم‘ نعیم شہزاد‘ محمد ذوالفقار چودھری عدنان سرور عاصم محمود‘ یاسمین سیف اللہ‘ یعقوب راجہ محمد نواز‘ محمد آصف اور کنول نعمان بھی اس حلقہ سے لیگی ٹکٹ کی دوڑ میں شامل ہیں۔ تحریک انصاف کی جانب سے ولید اقبال‘ ہمایوں اختر اور ابرار الحق کے علاوہ صوبائی وزیر بلدیات عبدالعلیم خان کی اہلیہ کے بھی اس حلقہ سے کاغذات منظور ہوئے ہیں۔ پی پی 164سے محمد ریاض‘ چودھری ظہیر‘ چودھری سرفراز‘ صابر علی‘ محمد نواز‘ محمد رضوان‘ محمد نواز اعوان‘ یوسف علی‘ عمر یوسف علی‘ میاں اویس‘ چودھری غلام مصطفی‘ غلام زین العابدین‘ رحمت علی‘ اعجاز احمد‘ شوکت علی‘ غلام مرتضیٰ‘ محمد تجمل حسین‘ محمد غضنفر‘ محمد نذیر‘ طاہر مجید‘ عمر فاروق‘ ملک سکندر علی‘ طالب حسین‘ غلام محمد‘ محمد حسن طار‘ نوید عاشق ڈیال‘ محمد کاشف اور سہیل شوکت بٹ ان کے دونوں بھائی ہمایوں اور اورنگزیب بٹ‘ سابق ایم پی اے وحید گل سمیت 32 امیدواروں کے کاغذات منظور ہوئے۔ پی پی 165سے ڈپٹی میئر راﺅ شہاب الدین اور ان کے فرزند راﺅ بابر علی‘ سیف الملوک کھوکھر‘ سہیل شوکت بٹ‘ اصغر علی‘ محمد رمضان‘ رزاق تنویر‘ امجد نعیم‘ محمد نواز‘ محمد یوسف‘ افضال عظیم‘ محمد رضوان‘ محمد سلیم ‘ اورنگزیب بٹ‘ ہمایوں بٹ‘ منشا سندھو‘ عبدالصمد‘ طارق شبیر‘ غلام مرتضیٰ‘ شبیر احمد‘ خالد فاروقی‘ محمد آکاش سندھو‘ سلیم اقبال‘ عاطف ایوب‘ محمد خالد‘ صابر حسین‘ عبدالغفور‘ محمد مستقیم‘ امجد طفیل‘ رانا خالد محمود‘ محمد اکرم‘ وسیم اکرم‘ محمد آصف‘ ناصر جاوید ڈوگر‘ محمد عرفان‘ راشد منہاس اور ندیم اقبال شامل ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں