30

عمران خان مجھے جیل بھیجنا چاہتے ہیں :شہباز شریف

مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہباز شریف نے کہا ہے عمران خان مجھے جیل بھیجنا چاہتے ہیں ، میں اس کے لیے تیار ہوں،عوام اس حکومت سے مایوس ہیں، پی ٹی آئی کے فارن فنڈنگ کیس کے حقائق عوام کے سامنے آ جائیں تو عمران نیازی ایک منٹ وزیراعظم نہیں رہ سکتے لیکن الیکشن کمیشن نے آج تک اس پر فیصلہ نہیں کیا، مسلم لیگ (ن) پر غلط الزامات لگا کر انتقام کی آگ بجھانے کی کوشش کی جا رہی ہے ، جو نہیں بجھ رہی، ہم سب نواز شریف کے ساتھ کھڑے ہیں اور ملک کو ترقی کی راہ پر ڈالنے کے لیے اپنا کردار ادا کرتے رہیں گے ، جیلیں، صعوبتیں ہم پہلے بھی برداشت کر چکے ہیں، عمران نیازی اتنا ظلم کرو، جتنا سہہ سکو کیوں کہ حالات بدلتے دیر نہیں لگتی، ہم بے ہودہ الزامات کے جواب نہیں دیں گے ۔ شاہد خاقان عباسی، رانا ثناء اللہ، خرم دستگیر، مریم اورنگزیب، شزا خواجہ اور عطاء اللہ تارڑ کے ہمراہ پارٹی سیکریٹریٹ ماڈل ٹاؤن میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا اس حکومت سے عوام نہ صرف مایوس بلکہ بیزاری کی انتہا پر ہیں۔ آر ٹی ایس کے فیل ہونے کے نتیجے میں بننے والی حکومت نے دو سال میں کیا سنوارا اور کیا بہتری کی، سب کچھ عوام کو پتا ہے ۔ عوام کو سہانے خواب دکھائے گئے مگر آج پھر مجھے غریب عوام کی آواز بن کر بات کرنی ہے ۔ نواز شریف کے دور میں چینی 50 روپے لیکن آج 100 روپے میں بھی دستیاب نہیں ہے ، گندم اور آٹا سستا تھا، جو آج غائب ہو چکا ہے ، ملک میں سلیکٹڈ وزیراعظم ان بحرانوں کو دن رات چھپانے میں مصروف رہا۔ انہوں نے کہارانا علیمہ باجی کی غیر ملکی جائیدادوں پر کوئی بات کرنے کو تیار نہیں، ان کو پروٹوکول کے ساتھ ایف بی آر میں بلوایا جاتا ہے ، علیمہ باجی اور خود عمران خان نے ایمنسٹی سکیموں کا فائدہ اٹھایا، ہم دودھ کے دھلے نہیں ،ناتواں انسان ہیں لیکن نواز شریف کی قیادت میں ہم نے ملک کو سنوارا، جس کے سب گواہ ہیں۔انہوں نے کہا مالم جبہ کا کیس کیوں نہیں کھلا، ہیلی کاپٹر انکوائری کا کیا بنا؟ آٹا، چینی اور ادویات بحرانوں کا کیا بنا؟چینی سکینڈل کے اصل ذمہ دار عمران خان اور عثمان بزدار ہیں جنہیں آج تک کسی نے نہیں پوچھا۔ فیس نہیں کیس کو دیکھنے والے اگر واقعی ایسا کرتے تو دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہونا چاہیے تھا، سانحہ بلدیہ جیسا حال ہماری معیشت کا ہونے جا رہا ہے ، اس پر آواز اٹھاتے رہیں گے ، اس کے لیے جیل بھی جانا پڑا تو تیار ہیں، پہلے بھی اس مرحلے سے گزر چکے ہیں، فرق یہ ہے اب ہم بیٹیوں سمیت عدالتوں کے چکر لگا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا ہمارے دور میں ایک دھیلے کی کرپشن کو یہ سامنے نہیں لا سکے ، خدا کو گواہ بنا کر کہتا ہوں اگر میرے مرنے کے بعد بھی کرپشن کا ایک ثبوت نکل آئے تو میری لاش کو قبر سے نکال کر سزا دی جائے ۔ انہوں نے کہا 100 ارب سے زائد کے منصوبے بی آر ٹی کی 4 بسیں جل چکی ہیں، اس سے کم پیسوں میں پنجاب میں 3 میٹرو بسیں بنیں۔انہوں نے کہا 2 سال سے مسلم لیگ (ن) پر الزامات لگا کر بدنام کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے ، مجھے صاف پانی کیس میں بلوا کر آشیانہ کیس میں گرفتار کر لیا جاتا ہے ۔ دریں اثناء شہباز شریف نے اقوام متحدہ میں مسئلہ کشمیر اٹھانے پر ترکی کے صدر رجب طیب اردگان کو خراج تحسین پیش کیا ہے ۔ اپنے ٹویٹ میں انہوں نے کہا کشمیری انہیں اپنے عظیم دوست کی حیثیت سے یاد رکھیں گے ۔ شہباز شریف کے بیٹے حمزہ شہباز کی جانب سے ان کی سوشل میڈیا ٹیم نے بھی شہباز شریف کو سالگرہ کی مبارک باد دیتے ہوئے کہا عوام کی خدمت ہمیشہ شہباز شریف کا اولین فریضہ رہا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں