265

فیصل آباد ایگری کلچر یورنیورسٹی نے 14 فروری کو ” ویلن ٹائنز ڈے “ پر ایسا کام کرنے کا اعلان کر دیا کہ کوئی سوچ بھی نہ سکتا تھا

14 فروری کو دنیا بھر میں ” ویلن ٹائنز ڈے “ منایا جاتاہے جس دن ہر کوئی اپنے پیاروں سے محبت کا اظہار کرتاہے لیکن کچھ نوجوان لڑکے اور لڑکیاں اس کا غلط ہی مطلب لے جاتے ہیں تاہم فیصل آباد کی معروف زراعت کی یونیورسٹی نے اس دن کے حوالے سے ایسا انتظام کر لیا ہے کہ جان کر ہر کوئی عش عش کر اٹھا ہے ۔
ویلن ٹائنز ڈے کے موقع پر فیصل آباد کی ایگرکلچر یونیورسٹی نے ” سسٹرز ڈے “ منانے کا اعلان کر دیا ہے جس کا مقصد مشرقی ثقافت اور مذہبی روایات کو نوجوان نسل کے اندر فروغ دینا ہے ۔یونیورسٹی کے وائس چانسر ڈاکٹر ظفر اقبال رندھاوا کی جانب سے اعلان کیا گیا کہ ” ہم اپنے کلچر ، اقدار اور اسلامی اقدار سے مالا مال ہیں ، ہم اس دن یونیورسٹی کی طالباﺅں میں سکارف ، چادریں اور برقعے تقسیم کریں گے ۔
ان کا کہناتھا کہ ” ہمارے کلچر میں خواتین زیادہ بااختیار ہیں اور انہیں بہن، ماں ، بیٹی اور بیوی کی صورت میں بے پناہ عزت کا درجہ حاصل ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم اپنے کلچر سے دور ہوتے جارہے ہیں جبکہ مغربی ثقافت ہم میں بھرتی جارہی ہے ، جو قومیں اپنی ثقافتی اقدار بھول جاتی ہیں ان کا دنیا کے نقشے نام و نشان بھی ختم ہو جاتا ہے ۔
ان کا کہناتھا کہ اپنے کلچر کی حفاظت کرنا بہت ضروری ہے تاکہ ہم اپنی پہنچان اور شان دنیا میں برقرار رکھ سکیں ، انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کو چاہیے کہ وہ اپنی تمام قوت تعلیم خاصل کرنے میں صرف کریں ۔ ان کی جانب سے یونیورسٹی میں گھڑی کے ٹاور کے قریب ایک بورڈ بھی آویزاں کیا گیا جس پر تحریر درج ہے کہ ” مجھے یونیورسٹی آف ایگری کلچر فیصل آباد سے پیار ہے “ ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں