176

لاہور کینٹ میں زائد المیعاد غیر قانونی سلنڈرز کی بھرمار‘ لوگوں کی زندگیاں داﺅ پر لگ گئیں

لاہور کینٹ میں ایل پی جی کے غیر معیاری سلنڈرز کے استعمال کا سلسلہ تھم نہ سکا۔ 10,10سال پرانے سلنڈرز استعمال کیے جا رہے ہیں جبکہ سلنڈرز پرمینوفیکچرنگ اور ایکسپائری کی تاریخ تک درج نہیں کی گئی۔ لال پیلے خستہ حال اور غیر معیاری سلنڈرز کے ذریعے ایل پی جی کاروبار عروج پر ہے۔ بھٹہ چوک‘ چرڑ پنڈ‘ غازی روڈ‘ بیدیاں روڈ اور صدر گول چکر کے علاقوں میں ایل پی جی کی دکانوں نر 10,10 سال پرانے سلنڈرز موجود ہیں‘ خستہ حال گیس سلنڈرز کی مینوفیکچرنگ اور ایکسائزی کا اندراج نہ کیا گیا۔ ایل جی پی فروخت کرنیوالوں نے سلنڈرز کی میعاد کو نظرانداز کر رکھا ہے جبکہ خستہ حال سلنڈرز کسی بڑے حادثے کا پیش خیمہ ثابت ہو سکتے ہیں‘ ضلعی انتظامیہ ‘ سول ڈیفنس اور دیگر ادارے بدستور خاموش ہیں۔ خستہ حال سلنڈرز آئے روز حادثات کا سبب بنتے ہیں جس کی روک تھام کیلئے ضلعی انتظامیہ اور سول ڈیفنس کا ایکشن لینا ضروری ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں