35

موٹروے زیادتی کیس کے ملزم عابدعلی کا شناختی کارڈ بلاک

بیرون ملک فرار کے شبے میں موٹروے زیادتی کیس کے مرکزی ملزم عابدعلی کا شناختی کارڈ بلاک کردیا گیا۔
موٹروے زیادتی کیس میں گرفتار ملزم شفقت کی نشاندہی پر کیس کے مرکزی ملزم عابدعلی کی گرفتاری کے لیے چھاپے جاری ہیں،عابد اور شفقت کے ساتھ موبائل فون پر رابطہ کرنے والے افراد کو بھی شامل تفتیش کیا جارہا ہے، جب کہ مرکزی ملزم عابد کے خاندان کے لوگ سی آئی اے پولیس کی حراست میں ہیں۔ پولیس حکام کا کہنا ہے کہ ملزم عابد کے بیرون ملک فرار کے شبے کے پیش نظر اس کا شناختی کارڈ بھی بلاک کروا دیا گیا ہے۔
دوسری جانب زیادتی کیس کی تفتیش انچارج انوسٹی گیشن گجر پورہ سے تبدیل کرکے انچارج انوسٹی گیشن پرانی انار کلی کو بھجوا دی گئی ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ دہشت گردی دفعات کی تفتیش انسپکٹر کرسکتا ہے سب انسپکٹر کے پاس اختیار نہیں ہے، ملزم عابد کی گرفتاری کے لئے دو ڈی ایس پی محمد علی بٹ اور حسنین حیدر مقرر کردے گئے ہیں۔
پولیس کے مطابق خاتون کی قمیض اور شلوار سے دونوں ملزمان شفقت اور عابدعلی کے سیمپل میچ ہوئے ہیں، ملزم شفقت کو گزشتہ روز شناخت پریڈ پر جیل بھجوا دیا گیا تھا، ملزم کی شناخت کے لئے خاتون کو جیل جانا پڑے گا، جیل میں سیکیورٹی بیرک میں ملزم کو رکھا گیا ہے، جیل میں تفتیشی آفسیر اور جیل حکام کی موجودگی میں شناخت پریڈ ہوگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں