207

پنجاب لینڈ ریکارڈ اتھارٹی کے ملازمین کا دوسرے روز بھی دھرنا

مذاکرات کامیاب نہ ہو سکے ،ملازمین نے مطالبات منظور ی تک دھرنا جاری رکھنے کا فیصلہ کرلیا،ایک ماہ میں 6 بار تمام اراضی ریکارڈ سنٹرز بند ہونے اور دو روز سے دھرنے کی وجہ سے خزانے کو مجموعی طورپر 55 کروڑ روپے کا نقصان ہو گا،فرد اور انتقالات کے حصول کیلئے آنیوالے سائلین کو انتہائی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا،ترجمان پنجاب لینڈ ریکارڈ نے کہا مظاہرین کنٹریکٹ ملازمین ہیں، تنخواہوں کی منظوری دیکر سفارشات حتمی منظوری کیلئے حکومت کو بھجوادی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں