203

پیپلرپارٹی کا حکومت کیخلاف جلسہ کرنے کا اعلان

چیئر مین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ ذوالفقار علی بھٹو کی تاریخ کو دوبارہ دہرایا جا رہا ہے،پیپلز پارٹی 23اکتوبر کو کٹھ پتلی حکومت کے خلاف تھر پارکر میں جلسہ کرے گی۔
بلاول بھٹو نے آصف زرداری سے اڈیالہ جیل میں ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ سندھ کی عوام کٹھ پتلی حکومت کے خلاف ہیں،پیپلز پارٹی 23اکتوبر کو تھر پارکر میں جلسہ کرے گی جس میں نالائق حکومت کے خلاف بھرپور احتجاج کیاجائے گا،احتجاج سیاسی جماعتوں کا حق ہے اس لیے حکومت اس کا سیاسی حق نکالے،کٹھ پتلی حکومت کو اندازہ ہی نہیں کہ ملک کیسے چلایا جاتا ہے، ہم ان ظالموں کے سامنے سرنہیں جھکائیں گے۔انہوں نے مزید کہا ہے کہ آصف زرداری کےخلاف کیس سندھ کا ہے لیکن چلایاپنڈی میں جا رہا ہے ،آصف زراری کو راولپنڈی جیل میں رکھ کر ذوالفقار علی بھٹو کی تاریخ کو دوبارہ دہرایا جا رہا ہے، پورے ملک میں سوال اٹھ رہاہے کہ صدرزرداری کاٹرائل پنڈی میںکیوں ہو رہا ہے؟ آصف زرداری کواستعمال کرکے خاندان پردباوڈالا جارہاہے۔
بلاول بھٹو نے کہا کہ قیدی کو طبی سہولیات فراہم نہ کرنا یو این کے قوانین کی خلاف ورزی ہے،عدالت نے زرداری کو سہولیات فراہم کرنے کاحکم دیا تھا،ہم اس حقوق کی بات کر رہے ہیں جو ہر پاکستانی کا حق ہے،ہم نے کبھی احتساب سے کبھی انکارنہیں کیا ہے،زرداری کی طبیعیت روز بروز خراب ہو رہی ہے لیکن ان کا حوصلہ بلند ہے،ا میدہے عدالت ہماری بات سنے گی اورانصاف دےگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں