379

گجرات کے تاریخی قلعہ کے آثار مٹنے لگے

گجرات شہر میں اکبر با دشاہ کے بنائے ہوئے تاریخی قلعہ کے آثار آہستہ آہستہ مٹنے لگے۔ قلعہ کا سب سے بڑا برج چند سال پہلے منہدم ہو گیا تھا دیگر برجیاں بھی اب گر رہی ہیں قلعہ کے اندر لوگ قابض ہیں اور باقاعدہ رہائش پذیر ہیں۔ محکمہ آثار قدیمہ کی عدم توجہی کے باعث یہ تاریخی ورثہ دم توڑ رہا ہے۔ گجرات شہر کے باسیوں نے اعلیٰ حکام کو اس قلعہ کے رہے سہے آثار محفوظ بنانے کی استدعا کی ہے یاد رہے کہ یہ تاریخی مقام گجرات کے مشہور ”فوارہ چوک“ سے پانچ منٹ کی پیدل مسافت پر واقع ہے اور یہ محلہ جاوید شہید کا حصہ ہے قابل ذکر بات یہ ہے کہ اکبر بادشاہ کا حمام آج بھی لوگ دور دراز سے دیکھنے آتے ہیں اکبر بادشاہ کے عہد حکومت میں تعلیمی سرگرمیوں کو مدرسہ اور مسجد سے نکال کر سکول کی سطح پر لایا گیا تھا۔ (رپورٹ: زین افضل جٹ‘ نمائندہ خصوصی قدریں نیوز)

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں